389

انڈونیشیا میں زلزلے سے تباہی، ہلاکتوں کی تعداد 100ہو گئی

جکارتہ(ورلڈ پوائنٹ نیوز) انڈونیشیا میں زلزلے نے تباہی مچا دی، ایک سو کے قریب افراد ہلاک ہو گئے، اسپتال مریضوں سے بھر گئے، ریسکیو حکام کو لینڈ سلائیڈنگ کی وجہ سے امدادی کارروائیوں میں مشکلات کا سامنا ہے۔

عالمی میڈیا کے مطابق انڈونیشیا کے جزیرے بالی کے برابر میں واقع ایک اور سیاحتی جزیرے لومبوک میں زلزلہ آیا ہے جس کی وجہ سے متعدد عمارتوں اور گھروں کو نقصان پہنچا۔ امریکی جیولوجیکل سروے کے مطابق زلزلے کی شدت ریکٹر اسکیل پر 7 اعشاریہ صفر ریکارڈ کی گئی جب کہ اس کی گہرائی 10 کلومیٹر زیر زمین تھی۔

انڈونیشیا کی وزارت صحت کی جانب سے جاری بیان میں بتایا گیا ہے کہ زلزے سے متاثرہ 500 سے زائد افراد کو مختلف اسپتالوں میں لایا گیا ہے جن میں سے 79 افراد کی حالت نازک بتائی جارہی ہے جس کے باعث ہلاکتوں میں مزید اضافہ ہو سکتا ہے جب کہ 100 سے زائد زخمیوں کو طبی امداد کے بعد گھر جانے کی اجازت دے دی گئی ہے۔

صورتحال کے پیش نظر سیاحوں نے واپسی کے لئے ائیر پورٹس پر ڈیرے ڈال لیے ہیں۔ زلزلے کے بعد مواصلاتی نظام بری طرح متاثر ہونے سے ریسکیو اہلکاروں کو امدادی کارروائیوں میں پریشانی کا سامنا ہے، حکام کے مطابق آفٹر شاکس کی تعداد ایک سو بیس سے تجاوز کر گئی۔ گِلی مینو جزیرے پر پھنسے ہزاروں افراد کو نکالنے کا کام لمبوک میں تباہی کی وجہ سے سست روی کا شکار ہے۔ انڈونیشیا کےصدر نے متعلقہ اداروں کو امدادی کارروائیاں تیز کرنے کا حکم دیاہے۔

خبر کو سوشل میڈیا پر شئیر کریں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں