425

بدرالمشائخ پیر سائیں محمد اسلم اویسی رحمة اللہ علیہ نے قومِ مسلم کے دلوں میں شمع عشق رسول ۖ فروزاں کر کے امن کے چراغ روشن کیے ہیں’ علامہ پیر محمد تبسم بشیر اویسی

نارووال(ورلڈ پوائنٹ نیوز)سالانہ عرس بدرالمشائخ وفاداری رسول ۖ کا پیغام دیتا ہے ۔حضرت بدرالمشائخ پیر سائیں محمد اسلم اویسی رحمة اللہ علیہ نے ساری زندگی عقیدۂ ختم نبوت و تحفظ ناموس رسالت پر ایک مجاہد کے حیثیت سے پہرا دیا ہے ۔وابستگان سلسلہ اویسیہ اور غلامان حضور بدرالمشائخ رحمة اللہ علیہ اسی کے ہمدرد اور خیر خواہ ہیں جو ناموس رسالت اور ختم نبوت پر مکمل یقین رکھتا ہیں۔بدرالمشائخ رحمة اللہ علیہ فیضان اویس قرنی رضی اللہ عنہ کے امین تھے ۔ سلسلہ اویسیہ کے فروغ کیلئے فقر پر فخر کے اصول پر کار بند رہے ۔سیدنا خواجہ اویس قرنی رضی اللہ عنہ کے ذکر کو اتنا عام کیا کہ ایک جہاں نسبت اویسیہ سے سرشار کر دیا ۔ بدرالمشائخ حضرت پیر سائیں محمد اسلم اویسی رحمة اللہ علیہ کے شب و روز غلبۂ دین ،فروغ عشق رسول ۖ ، احیائے سنت، اشاعت تعلیمات اویسیہ اور جذبۂ حب الوطنی کے فروغ میں بسر ہوئے ۔ خانقاہ اویسیہ سے طلوع ہونے والے اس آفتاب طریقت نے مرکز اویسیاں نارووال کو مثل ماہتاب چمکایا ۔محبوب المشائخ علام پیر محمد تبسم بشیر اویسی اپنے مرشد کامل حضور بدرالمشائخ پیر سائیں محمد اسلم اویسی رحمة اللہ علیہ کی زندہ کرامت ہیں۔آج ملک و ملت میں امن و محبت کو پروان چڑھانے اور وطن عزیز کو استحکام دینے کیلئے اہل تصوف کے نظریۂ محبت کو فروغ دینے کی ضرورت ہے ۔ تاقیامت 28نومبرکو داعیان محبت اپنے مرشد بدرالمشائخ کو نذرانہ عقیدت پیش کرتے رہیں گے ۔ پاکستان اولیاء اللہ کے فیضان کا مرکز ہے ۔ دہشت گردی تعلیمات قرآن و سنت اور نظریۂ اولیائے امت کے خلاف ہے ۔بدرالمشائخ پیر سائیں محمد اسلم اویسی رحمة اللہ علیہ نے قومِ مسلم کے دلوں میں شمع عشق رسول ۖ فروزاں کر کے امن کے چراغ روشن کیے ہیں ۔ان خیالات کا اظہارمرکزی امیر تحریک اویسیہ پاکستان پیر غلام رسول اویسی اور علامہ پیر محمد تبسم بشیر اویسی سجادہ نشین مرکز اویسیاں نارووال نے 17ویں سالانہ عرس مبارک بدرالمشائخ پیر سائیں محمد اسلم اویسی رحمة اللہ علیہ کے عظیم الشان اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔اس موقعہ پر خطاب کرتے ہوئے علامہ پیر سید فدا حسین شاہ حافظ آباد، علامہ پیر محمد عارف ہزاروی آستانہ عالیہ شیخ القرآن وزیر آباد،علامہ مفتی نعیم اللہ نعیمی آف سرائے عالمگیر،علامہ پیر وقاص منور مجددی آف لاہور ،علامہ محمد سرور سلہریا اویسی آف ظفروال،علامہ نوازش علی فریدی ننکانہ صاحب اور دیگر مقررین نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آستانہ صرف مرکز اویسیاں ہی نہیں مرکز عاشقاں بھی ہے ۔علامہ پیر محمد تبسم بشیر اویسی سفیر محبت ہیں جو اپنے مرشد کے عشق میں عرس بدرالمشائخ کا انتظام کر کے ہمیں نیکی کمانے کا موقعہ دیتے ہیں۔ روحانیت سے معمور یہ عرس مبارک ہمارے عقیدہ و نظریہ کی حقانیت کی دلیل ہے ۔عرس مبارک میںپیر محمد ظہور واصف بڈیانوی واصفی آستانہ بڈیانہ شریف، پیر سید اظہر الحسن شاہ گیلانی آستانہ عالیہ کلی شریف ،پیر سید محفوظ الحسنین شاہ آستانہ عالیہ علی پور سیداں شریف، چوہدری محمد یعقوب اویسی ایڈووکیٹ چیف ایڈیٹر ماہنامہ تاجدار یمن پاکستان، علامہ پیر قاضی محمد یعقوب رضوی ڈویژنل امیر جماعت اہلسنت گوجرانوالہ ،پیر سید سیف اللہ خالد گیلانی آستانہ عالیہ کوٹلی پلاٹ ، ابرار الحق چوہدری چیئرمین سہارا ٹرسٹ نارووال،نعیم اللہ خاں کاکڑ راہنما تحریک انصاف پاکستان ضلع نارووال ،عاشق رسول ڈاکٹر خلیل اختر چوہدری سابق ای ڈی او ہیلتھ نارووال،علامہ عینین مدنی ونیکے تارڑ، پیر سید احمد رضا بخاری آستانہ عالیہ ڈونگیاں شریف ،پیرضیاء الدین احمد آستانہ عالیہ مردانہ شریف،پیر خواجہ شیخ محمد اکمل اویسی لالہ جی سرکار ملتان شریف،ڈی سی نارووال علی عنان قمر ،ڈی ایس پی محمد اکرام ، پیر عرفان الہٰی قادری آستانہ عالیہ ساہو چک شریف، پیر ارشد محمود نعیمی قادری آستانہ عالیہ تکیہ کلاں شریف، پیر سید طلحہٰ شاہ بخاری ،پیر اکرام اللہ مجددی آستانہ عالیہ ظفروال ،پیر خواجہ معصوم انور نقشبندی آستانہ عالیہ اللہ ھو رحمان پورہ نارووال،بابائے صحافت ایم حفیظ اللہ ،قاری بشیر اسماعیل سیفی،علامہ محمد اعظم عطاری،حافظ محمد طاہر ضیاء ،علامہ حافظ محمد لقمان اویسی،قاری محمد ارشد اویسی،علامہ عمر فاروق کھچی ،قاری علی رضا اویسی،علامہ محمد ظہیر جلالی، محمد عاصم بشیر اویسی، ملک مختار احمد بھولا، حافظ عبد الغفار سلطانی، حافظ شعیب زکریا، ملک ذوالفقار ایڈووکیٹ، ملک عبد الرئوف ،چوہدری ذوالفقار علی چیئرمین UCچندووال،ڈاکٹر عبد الحق انصاری، محمد مزمل حفیظ بابر صدر مرکزی انجمن شہریاں نارووال، محمد رضوان انور ،مرزا محمد نعیم ،علی رضا بٹ ،عابد محمود بٹ حافظ عبد الرحمن ٹرسٹ ، صاحبزادہ علی رضا اویسی،سینئر صحافی رشید خان جدون ایبٹ آباد،محمد لقمان بٹ مہدوش ٹریول اینڈ ٹورز،خواجہ محمد آصف نظامی آف شکر گڑھ ، حافظ محمد عرفان اسلام اویسی، صاحبزادہ عاصم حبیب ظفروال ،مفتی طفیل نقشبندی، حافظ تنویر ہمدمی، صاحبزادہ علی احمد اویسی، صاحبزادہ محمد احمد اویسی، شاہد رشید شیخ،صاحبزادہ ندیم خالق رضا نقشبندی،محمد عظیم قادری آف گوجرانوالہ، قاری سجاد رضوی ،قاری محمد جمیل تبسم اویسی،محمد سجاد اویسی،حافظ غلام مصطفی اویسی،حافظ محمد دلشاد اویسی، محمد عثمان مغل،انصر قادری، محمد فرخ اسلم قادری،معروف ثناء خواں محمد طارق مدنی Qtv،مبشر حسن بھٹی،علی بن امین ،حافظ محمد ارشد جماعتی، حافظ محمد عثمان طاہری،محمد عدیل فریدی،محمد آکاش شبیر اویسی،محمد سجاد قادری اور دیگر نے بھی خطاب و ہدیہ نعت پیش کیا اور مہمانان خصوصی تھے ۔عرس مبارک میں سینکڑوں ،مذہبی ،سیاسی ،سماجی اور روحانی شخصیات کی اور ہزاروں کے تعداد میں عشاقان سیدنا خواجہ اویس قرنی اور عقدتمندان مرکز اویسیاں نارووال نے شرکت کی ۔ اختتام پر ملک پاکستان میں قیام امن اور استحکام پاکستان کیلئے دعا کی گئی ۔

خبر کو سوشل میڈیا پر شئیر کریں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں