330

خلا میں ہتھیاروں کی تنصیب میں پہل نہیں کریں گے، پاک روس مشترکہ اعلامیہ

بشکیک(ورلڈ پوائنٹ) پاکستان اور روس کے وزرائے خارجہ کے مابین مشترکہ اعلامیے پر دستخط کر دیے گئے، اعلامیے کے مطابق دونوں ممالک خلا میں ہتھیاروں کی تنصیب میں پہل نہیں کریں گے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان اور روس کے وزرائے خارجہ کے مابین خلا میں ہتھیاروں سے متعلق مشترکہ اعلامیے پر دستخط کیے گئے، یہ اعلامیہ پاکستان اور روسی فیڈریشن کی طرف سے بشکیک میں جاری کیا گیا۔

اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ خلا میں سرگرمیاں ریاستوں کی سماجی، معاشی اور سائنسی ترقی کا اہم ذریعہ ہیں، ان سرگرمیوں کا عالمی و علاقائی سلامتی برقرار رکھنے میں بھی کردار ہے، اس لیے خلا کو عالمی قانون کے مطابق اقوام کی بہتری کے لیے استعمال کرنا چاہیے۔

اعلامیے میں کہا گیا کہ ہم اقوام متحدہ کے چارٹر کے آرٹیکل 2 میں درج عہد کا اعادہ کرتے ہیں، خلا میں سرگرمیوں اور طاقت سے عالمی تعلقات سے احتراز برتا جائے، خلا میں اسلحے کی دوڑ سے بچاؤ کا عالمی معاہدہ عالمی برادری کی ترجیح ہے۔

اعلامیے میں مزید کہا گیا کہ دونوں ممالک خلا میں ہتھیاروں کی تنصیب میں پہل نہیں کریں گے، کوشش کریں گے کہ خلا فوجی تصادم کا میدان نہ بنے۔

دریں اثنا، وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کی بشکیک میں جاری شنگھائی تعاون تنظیم کی وزرائے خارجہ کونسل کے اجلاس کے دوران اپنے روسی ہم منصب سرگئی لاروف سے ملاقات ہوئی۔

دوران ملاقات دو طرفہ تعلقات، خطے میں امن و امان کی صورت حال سمیت باہمی دل چسپی کے متعدد امور پر تبادلۂ خیال کیا گیا، دونوں وزرائے خارجہ نے پاکستان اور روس کے مابین تجارت، توانائی، دفاع اور ٹیکنالوجی سمیت مختلف شعبوں میں دو طرفہ تعاون کے فروغ پر اتفاق کیا۔

شاہ محمود کا کہنا تھا کہ روس کے وزیر خارجہ کے ساتھ اقتصادی تعاون کے فروغ اور دو طرفہ تجارت کا حجم بڑھانے کے حوالے سے مختلف پہلوؤں پر تفصیلی بات چیت ہوئی۔

خبر کو سوشل میڈیا پر شئیر کریں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں