391

ذیشان کے دہشت گردوں کیساتھ رابطے کے شواہد مل گئے، انٹیلی جنس ذرائع

لاہور(ورلڈ پوائنٹ نیوز) انٹیلی جنس ذرائع کا کہنا ہے کہ سانحہ ساہیوال میں جاں بحق ہونے والے ذیشان کے دہشت گردوں کے ساتھ رابطے کے ٹھوس شواہد حساس اداروں کو مل گئے۔

کاؤنٹر ٹیررازم ڈیپارٹمنٹ پنجاب کے ہاتھوں مبینہ مقابلے میں مارے جانے والے ذیشان کے دہشت گردوں کے ساتھ رابطے کے ٹھوس شواہد حساس اداروں کو مل گئے ہیں۔

انٹیلی جنس ذرائع کے مطابق ذیشان کے موبائل فون سے دہشت گرد عثمان کے ساتھ تصویر مل گئی ہے، عثمان ہارون 15 جنوری کو فیصل آباد میں سی ٹی ڈی مقابلے میں مارا گیا تھا۔

انٹیلی جنس ذرائع کا کہنا ہے کہ ذیشان کی گاڑی کی خرید و فروخت کے دستاویزات بھی سامنے آگئے ہیں، ذیشان کے زیر استعمال گاڑی عدیل حفیظ نے خریدی تھی، عدیل حفیظ بھی عثمان ہارون کے ساتھ 15 جنوری کو فیصل آباد مقابلے میں مارا گیا تھا۔

واضح رہے کہ 19 جنوری کو ساہیوال میں کارروائی کے بعد سی ڈی ٹی کی جانب سے دعویٰ کیا گیا کہ انہوں نے دہشت گردی کا بہت بڑا منصوبہ ناکام بنادیا، گاڑی میں موجود ذیشان سمیت نامعلوم موٹرسائیکل سواروں کی جانب سے فائرنگ کی گئی تھی جب کہ چاروں افراد کی ہلاکت بھی ان کے ساتھیوں کی فائرنگ کا نتیجہ قرار دی گئی۔

خبر کو سوشل میڈیا پر شئیر کریں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں