314

سفارت خانہ پاکستان برادری کے مسائل کے حل کےلئے ہر ممکن مدد و تعاون جاری رکھے ہوئے ہے سفیر پاکستان

یونان و پاکستان کے سفارتی تعلقات کو مضبوط بنانے حالیہ مسائل پر سفیر پاکستان خالد عثمان قیصر کی پریس بریفنگ
یونان ایتھنز(میاں وقار احمد لادیاں -اعجاز راء )23 ستمبر دن بارہ بجے سفارت خانہ پاکستان ایتھنز میں سفیر پاکستان نے پریس بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ سفارت خانہ پاکستان پاکستانی برادری کو درپیش مسائل کے حل کےلئے جدوجہد جاری رکھے ہوئے ہے جیلوں اور حراستی مراکز میں قید پاکستانیوں کی قانونی واخلاقی مدد کے لیے دورے جاری ہیں اس سلسہ میں حکومتی سطح پر بات چیت کر چکے ہیں یونان انتظامیہ کی طرف سے مختلف جیلوں کیمپوں میں قیدتقریبا 5000 پاکستانی تارکین وطن کےتصدیق کے لئے کاغذات موصول ہوے ہیں. جن میں سے 280 ڈیپورٹ ہوچکے ہیں فیملیز ویزہ کے لئے حکومت یونان و
پاکستان سے رابطہ میں ہیں یونان کے متعلقہ اداروں کے اعلیٰ حکام کے نوٹس میں یہ ایشو پیش کر چکے ہیں اس میں کافی پیشرفت ہوئی ہے .36 فیملیز نے سفارت خانہ پاکستان رابطہ کیا تھا جن کے کاغذات تصدیق کے لیے دفتر خارجہ روانہ کیے جاچکے ہیں پاکستان ویونان کے سفارتی تعلقات پر گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا 2012 میں پاکستان کا یورپین یونین کے ساتھ ایگریمنٹ اور تصدیق کے بیغر اوورسیز ڈیپورٹ ہونے والے پاکستانیوں کو واپس بجھوانے پر تعلقات میں ٹھراو آگیا تھا لیکن الحمدلله سفارتی سطح پر حکومت کے اعلی حکام کے ساتھ مسلسل ملاقاتوں کے بعد اس میں کافی حد تک بہتری کی امید نظر آئی ے انشاءاللہ بہت جلد دوستانہ تعلقات استوار ہونگے سفیر پاکستان نے کہا ہم نے متعلقہ اداروں کو آگاہ کیا ے کہ پاکستانی یونان کی معشیت میں اہم کردار ادا کر رے ہیں جسے انہوں نے تسلیم کیا ے اب پاکستانی برادری پر فرض ے کہ وہ یونانی قوانین کا احترام کرتے ہوے اپنا مثبت کردارادا کریں .خرسی اووگی(گولڈن ڈان) جماعت کے سربراہ سے ہو نے والی ملاقات کے متعلق انہوں نے بتایا کہ انکا موقف ہے کہ ہمارا پاکستانیوں کے ساتھ جانبدارانہ رویہ نہیں ہم چاہتے ہیں کہ تمام تارکین وطن یونان سے چلے جاہیں پاکستانی یونانی تنظیموں کے ساتھ غیر ضروری احتجاجی مظاہروں میں شریک ہو کر اپنے آپکو نمایاں کرتے ہیں اس لیے پاکستانی دوسری کمیونٹیز کی نسبت زیادہ نوٹس میں آجاتے ہیں.
سفیر پاکستان نے دورہ تھیسلونکی .حراستی مرکز کورنتھوس. کردالوجیل کے متعلق بتایا کہ قیدیوں بلخصوص بے گناہ قیدیوں کے لئے سفارت خانہ پاکستان قانون کے مطابق مدد کر رہا ے تھیسلونکی میں کمسن پاکستانی بچوں سے غیر قانونی کام کرواے جارے ہیں جعلی سگریٹ فروشی کا کام کرنے والے بچوں کو استمعال کر رے ہیں اس کے علاوہ پاکستانی خواتین پورنو گرافی غیر اخلاقی دھندھوں میں ملوث پاے جانے کی رپورٹس ملی ہیں جن کا سختی سے نوٹس لیا جارہا ے اغواء کاروں کا قلع قمع کرنے میں انتظامیہ کے علاوہ پاکستانی برادری صحافی برادری کے تعاون کی اشد ضرورت ے پنشن والے افراد کے کاغذات کی تصدیق سفارت خانہ پاکستان سے شروع ہو چکی ے40 افراد کی انکوائری پاکستان روانہ کی جاچکی ے شناختی کارڈ اور پاسپورٹ انکوائری کو آسان کر دیا گیا ےجن کے شناختی کارڈ اور پاسپورٹ بن چکے ہیں اگر وہ دور دراز شہروں میں مقیم ہیں وہ بعزریہ ڈاک اپنا پاسپورٹ وصول کرسکتے ہیں پریس بریفنگ میں سنیئر صحافی ارشاد احمد بٹ سید محمد جمیل بشیر شاد میاں وقار احمد لادیاں سید اشیر حیدر عرفان تیمور ناصر جسوکی کے علاوہ دنیا نیوز کے ظفر ساہی مرزا جاوید اقبال ساحل جعفری چوہدری اعجاز یونانی اخبار کا تھے مرینی کی نمائندہ عمیرہ موجود تھے اس موقعہ پر سفیر پاکستان کی طرف سے صحافی برادری کے اعزاز میں ظہرانہ دیا گیا

خبر کو سوشل میڈیا پر شئیر کریں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں