389

عہد تمیمی کی فلسطینی صدر سے ملاقات، یاسرعرفات کے مقبرے پرحاضری

رملہ(ورلڈ پوائنٹ نیوز) اسرائیلی قید سے رہائی پانے والی بہادر فلسطینی لڑکی عہد تمیمی اپنی رہائی کے بعد پریس کانفرنس میں اسرائیلی جارحیت کے خلاف جدوجہد جاری رکھنے کا اعلان کیا اور یاسر عرفات کے مقبرے پر حاضری دینے کے بعد فلسطینی صدر محمود عباس سے بھی ملاقات کی۔

عرب میڈیا کے مطابق اسرئیلی سپاہیوں کو تھپڑ رسید کرنے والی 17 سالہ نڈر فلسطینی لڑکی عہد تمیمی نے جیل سے رہائی کے بعد اپنے اہل خانہ کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہنا تھا کہ اسرائیلی قبضے کے خاتمے تک جدو جہد جاری رہے گی۔ اسرائیلی جیلوں میں قید خواتین کے عزم و حوصلے بلند ہیں جس کی ایک مثال میں خود ہوں۔

بعد ازاں عہد تمیمی نے والدین کے ہمراہ فلسطینی صدر محمود عباس سے ملاقات کی۔ فلسطینی صدر نے عہد تمیمی کو جیل سے رہائی پر مبارک باد دیتے ہوئے تمیمی خاندان کی جدوجہد کی تعریف کی اور عہد تمیمی کو نوجوانوں کے لیے تحریک آزادی فلسطین کا استعارہ قرار دیا۔ قبل ازیں عہد تمیمی نے حریت رہنما یاسر عرفات کے مقبرے پر بھی حاضری دی اور پھول چڑھائے۔

واضح رہے کہ 17 سالہ عہد تمیمی کو اسرائیلی عدالت نے بارہ الزامات کی بنیاد پر 8 ماہ قید کی سزا سنائی تھی جس میں اسرائیلی فوجی کو تھپڑ مارنا بھی شامل ہے۔ تھپڑ مارنے کی ویڈیو وائرل ہونے کے بعد عہد تمیمی فلسطین کی جدوجہد آزادی کا استعارہ بن چکی ہیں۔

خبر کو سوشل میڈیا پر شئیر کریں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں