79

امریکی بحری بیڑے کو ایران ایک میزائل سے تباہ کرسکتا ہے

تہران (ورلڈ پوائنٹ) ایرانی عالم دین نے خطبہ جمعہ کے دوران دعویٰ کیا ہے کہ ایران امریکی بحری بیرے کو ایک میزائل سے تباہ کرسکتا ہے۔

تفصیلات کے مطابق امریکا اور ایران کے درمیان جاری کشیدگی میں اس وقت اضافہ ہوا جب امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے سنہ 2015 میں عالمی طاقتوں اور ایران کے درمیان ہونے والے جوہری معاہدے سے دستبرداری کے بعد ایران پر نئی پابندیوں کا اعلان کیا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا تھا کہ ایرانی عالم دین یوسف طبا طبائی نژاد کی جانب سے یہ دعویٰ بحری بیڑے ابراہام لنکن کی مشرق وسطیٰ آمد کے کیا گیا ہے۔

مولانا یوسف طباطبائی نے اصفھان میں جمعے کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ’اربوں ڈالر مالیت کے طیارہ بردار بیڑے کو صرف ایک میزائل سے تباہ کرسکتے ہیں‘۔

دوسری جانب امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو کا کہنا تھا کہ اگر ایران نے کسی بھی قسم کا کوئی حملہ کیا تو اس کا رد عمل بہت شدید و فوری آئے گا، ایرانی حکومت کو یہ بات سمجھنا ہوگی اگر امریکا یا اس کے شہریوں کے خلاف اس نے یا اس کے کسی گروپ نے حملے کی کوشش کی تو فوری اور فیصلہ کن ردعمل آئے گا۔

واضح رہے کہ امریکی صدر دونلڈ ٹرمپ نے ایران دھمکیوں کے بعد امریکی بحری بیڑا مشرق وسطیٰ میں بھیجا تھا، دو روز قبل مصر کی نہر سویز سے گزرا تھا۔

سوشل میڈیا پر شیئر کریں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں