99

امریکا اور روس نے جوہری ہتھیاروں کا تاریخی معاہدہ ختم کردیا

بنکاک ،ماسکو(ورلڈ پوائنٹ) امریکا اور روس نے طویل عرصے سے قائم جوہری ہتھیاروں کا تاریخی معاہدہ انٹرمیڈیٹ رینج نیوکلیئر فورسز ٹریٹی (آئی این ایف ) کو باضابطہ طور پر ختم کردیا۔

تفصیلات کے مطابق امریکا کے سیکریٹری آف اسٹیٹ مائیک پومپیو نے بینکاک میں ریجنل فورم میں آئی این ایف سے واشنگٹن کی باضابطہ دست برداری کا اعلان کیا۔

مائیک پومپیو نے ایسوسی ایشن آف ساؤتھ ایسٹ ایشین نیشنز ( آسیان) کے وزرائے خارجہ کے اجلاس میں کہا کہ ‘اس معاہدے کے خاتمے کا ذمہ دار صرف روس ہے’۔

مائیک پومپیو کا کہنا تھا کہ ‘روس اپنے ناموافق میزائل سسٹم کو تباہ کرنے میں مکمل طور پر ناکام ہوا’۔

امریکی سیکریٹری آف اسٹیٹ مائیک پومپیو کی جانب سے اعلان سے قبل روس کے وزیر خارجہ نے ماسکو میں کہا تھا کہ ‘معاہدے کو امریکا کے اقدام کے بعد ختم کیا گیا’۔

بعدازاں روسی وزارت خارجہ کا یہ کہنا تھا کہ واشنگٹن نے معاہدے سے دست بردار ہو کر سنگین غلطی کی، ساتھ ہی یہ کہا تھا کہ امریکا نے روس کی مبینہ خلاف ورزی کے بجائے اپنے ذاتی مفاد کی خاطر اعلان کیا۔

ادھر روس کے نائب وزیر خارجہ سرگئی ریابکوف نے امریکا سے آئی این ایف سے دست برداری کے بعد انٹرمیڈیٹ رینج نیوکلیئر میزائل کی تعیناتی پر عمل درآمد روکنے پر زور دیا۔

خیال رہے کہ واشنگٹن برسوں سے روس پر معاہدے کی خلاف ورزی کرتے ہوئے نائن ایم 729 نامی نئے قسم کا میزائل تیار کرنے کا الزام عائد کرتا رہا ہے اور نیٹو بھی اس دعوے کی حمایت کرتا ہے۔

نیٹو کے مطابق میزائل 1500 کلومیڑ کے فاصلے پر موجود ہدف کو نشانہ بناسکتا ہے جبکہ ماسکو کا کہنا ہے کہ یہ صرف 480 کلومیٹر کا فاصلہ طے کرسکتا ہے۔

سوشل میڈیا پر شیئر کریں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں