151

علم کے حصول کے لیے ادب کا ہونا انتہائی ضروری ے بے ادب علم حاصل کر ہی نہیں کر سکتا، شیخ السلام ڈاکٹر محمد طاہر القادری

میرے لیے آپکا شاگرد ہونا اعزاز کی بات ے اپنے وطن اور قوم کے لئے ایمانداری جانفشانی سے فرائض سرانجام دیئے برداری کی محبت. عزت دعائیں میرا سرمایہ ہیں سفیر پاکستان خالد عثمان قیصر

پوری دنیا کاسفر کیا پہلی دفعہ سفیر پاکستان زندہ باد کے نعرے سنے جو آپکی نیک نامی ایمانداری لوگوں کا آپ سے پیار کا منہ بولتا ثبوت ے پروفیسر ڈاکٹر طاہر القادری

ایتھنز (میاں وقار احمد لادیاں )بانی وسرپرست اعلیٰ منہاج القرآن انٹرنیشنل حضور شیخ السلام پروفیسر ڈاکٹر محمد طاہر القادری عقیدت مندوں کی شدید خواہش پر عرصہ پندرہ سال بعد اپنے فرزند حسن محی الدین .پوتے شیخ حماد مصطفیٰ المدنی قادری. ظل حسن .صدرمنہاج یورپین کونسل . یورپ زون تین کےصدر اقبال احمد وڑائچ کے ہمراہ تین روزہ تبلیغی و تربیتی دورہ پر یونان تشریف لائےمقامی ہوٹل میں انسان کی اخلاقی وروحانی ترقی کے لئے منعقدہ سیمنار سے خطاب کرتے ہوئے فرمایاگزشتہ زمانوں کا اگر موزانہ کیا جاے تو حالیہ دور یکسر مختلف دنیا لگتی ے مادیت ہر شبعہ ہاے زندگی پر اثر انداز ہوئی ے بطور مسلمان ہمیں اپنے پرکھوں کی اقدار کو یاد رکھنا چاہئے میرے اور آپ کے آقا صلی الله عليه وسلم کی سیرت ہمارے لیے راہنمائی کا خزینہ ے علم کے بیغر آپ روحانی اخلاقی ترقی نہیں کر سکتے لیکن علم کے حصول کے لیے باادب ہونا پہلی سیڑھی ے

یونان عالمی سطح پر علم ودانش ادب ثقافت کا مرکز رہا ے جیسا کہ بابل . مصر کی تہذیبوں سے عالم انسانیت کو روشنی ملی لیکن انسانی تہذیب کا آخری زمانہ مکہ اور مدینہ ے جہاں سے ساری کائنات آج تک فیض یاب ہو رہی ے آج کے دور میں اخلاقی اقدار زوال پذیر ہو رہی ہیں اسکی بنیادی وجہ دین سے دوری اپنی تاریخ سے آگاہی نہ ہونا اور بالخصوص علم کی کمی ے سمینار سے سفیر پاکستان خالد عثمان قیصر نے خطاب کرتے ہوئے کہا مجھے آپکا شاگرد ہونے پہ فخر ے آپ کی تربیت کا اثر ے کہ پوری زندگی اپنے فرائض ایمانداری سے سرانجام دیئے سفیر پاکستان کے خطاب کے دوران سفیر پاکستان زندہ باد سفارت خانہ پاکستان زندہ باد کے نعروں سے گونجتا رہا

سفیر پاکستان کے خطاب کے دوران شیخ السلام ڈاکٹر محمد طاہر القادری نے تاریخی الفاظ ادا کرتے ہوئے کہا پوری دنیا کا سفر کر چکا ہوں بہت ساری تقریبات میں سفیر بھی موجود ہوتے تھے لیکن اپنی زندگی میں پہلی دفعہ سفیر پاکستان زندہ باد کے نعرے سنے ہیں جو پاکستانی برادری کی آپ سے والہانہ محبت آپکی قوم کے لے خدمات کا منہ بولتا ثبوت ہے سفیر پاکستان نےاپنی تعیناتی کے بعد برادری کے لئے کاموں پاکستان اور یونان کے تعلقات کو مضبوط بنیادوں پر استوار کرنے پر روشنی ڈالی سفیر پاکستان نے ڈاکٹر محمد طاہر القادری کے بارے فرما کہ ابن عربی مولانا روم حضرت علامہ اقبال کی فکر حکمت کو جمع کیا جاے تو طاہر القادری بنتا ہے

سمینار کے اختتام پر سفیر پاکستان کو حسن کارکردگی شیلڈ پیش کی گی یونان کے تنظیمی کارکنان کو تعریفی اسناد اور یورپین کونسل کی طرف سے یونان والوں کو تعریفی شیلڈ دی گی سمینار میں پاکستانی برادری کی سیاسی سماجی دینی جماعتوں کے منتظمین صحافی برادری پاکستانی فیملیز نے شرکت کی دعا کے بعد لنگر شریف تقسیم کیا گیا.

سوشل میڈیا پر شیئر کریں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں