181

جرمنی روس کا ’قیدی‘ بن چکا ہے، ڈونلڈ ٹرمپ

برسلز(ورلڈ پوائنٹ نیوز) امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے بالٹک خطے میں روسی پائپ لائن کے لیے جرمن حمایت پر برلن حکومت کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔ ٹرمپ اس سے قبل جرمنی پر متعدد امور کے حوالے سے برہمی کا اظہار کر چکے ہیں۔

امریکی صدر ٹرمپ نے بدھ کے روز جرمنی پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ جرمنی روس کا ’قیدی‘ ہے۔ ٹرمپ نے برلن حکومت کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ وہ دفاعی بجٹ میں اضافے میں ناکام رہی ہے۔

ٹرمپ نے بدھ کو برسلز میں مغربی دفاعی اتحاد نیٹو کے سربراہی اجلاس میں شرکت سے قبل نیٹو کے سیکرٹری جنرل ژینس اسٹولٹن برگ کے ہم راہ صحافیوں سے بات چیت میں کہا کہ یہ نہایت ’نادرست‘ بات ہے کہ امریکا یورپ کو روس سے تحفظ فراہم کرنے کے لیے بھاری سرمایہ خرچ کر رہا ہے، جب کہ یورپ کی سب سے بڑی معیشت جرمنی ماسکو کے ساتھ گیس معاہدوں کی حمایت کر رہی ہے۔

ٹرمپ اس سربراہی اجلاس کے موقع پر آج شام جرمن چانسلر انگیلا میرکل سے بھی ملاقات کریں گے، جب کہ پیر کو ٹرمپ کی ملاقات فن لینڈ کے شہر ہیلسنکی میں روسی صدر ولادیمیر پوٹن سے بھی ہو گی۔

یہ بات اہم ہے کہ جرمنی نے بالٹک خطے میں گیارہ ارب ڈالر لاگت سے بچھائی جانے والی نئی گیس پائپ لائن کی تنصیب کے لیے سیاسی معاونت فراہم کی ہے۔ نورڈ اسٹیم ٹو نامی روسی پائپ لائن کی تنصیب پر جرمن حمایت کے مقابلے میں متعدد یورپی ریاستوں کو تحفظات ہیں۔

میرکل تاہم یہ بھی کہہ چکی ہے کہ یہ منصوبہ نجی تجارتی اشتراک عمل کا نتیجہ ہے اور اس کے لیے جرمن ٹیکس دہندگان کا پیسہ استعمال نہیں کیا جا رہا۔


ٹرمپ نے صحافیوں سے بات چیت میں کہا، ’’ایک طرف ہم سے توقع کی جاتی ہے کہ ہم روس سے یورپ کو تحفظ فراہم کریں اور دوسری جانب جرمنی سالانہ بنیادوں پر روس کو اربوں ڈالر ادا کر رہا ہے اور اس کے ساتھ تیل اور گیس کے بڑے بڑے معاہدے کر رہا ہے۔‘‘

ٹرمپ کا مزید کہنا تھا، ’’ہم جرمنی کا دفاع کر رہے ہیں، ہم فرانس کا دفاع کر رہے ہیں، ہم ان تمام ممالک کا دفاع کر رہے ہیں اور پھر ان میں سے کئی ملک نکلتے ہیں اور روس کے ساتھ پائپ لائن کے منصوبے بنا کر روس کو اربوں ڈالر ادا کرنے لگتے ہیں۔‘‘

ٹرمپ کے بہ قول، ’’یعنی آپ چاہتے ہیں کہ ہم آپ کو روس سے تحفظ فراہم کریں اور آپ اربوں ڈالر روس کو ادا کر دیں۔ میرے خیال میں یہ نہایت نامناسب بات ہے۔‘‘

سوشل میڈیا پر شیئر کریں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں